گیارہ ستمبر دہشت گرد حملوں کی یاد میں تقاریب، وائٹ ہاؤس تقریب میں ٹرمپ شریک

صدر کے طور پر پہلی بار ڈونالڈ ٹرمپ 11ستمبر 2001 میں نیو یارک اور واشنگٹن پر ہونے والے حملوں کی یاد میں منعقدہ تقاریب میں شریک ہو رہے ہیں۔

امریکی سرزمین پر ہونے والی بدترین دہشت گردی کی 16 ویں برسی کی یاد میں وائٹ ہاؤس میں ایک تقریب منعقد ہوئی جس میں ٹرمپ شریک ہوئے، جس میں 8 بج کر 40 منٹ پر چند لمحوں کے لیے خاموشی اختیار کی گئی، جب القاعدہ کے دہشت گردوں کا ہائیجک کردہ پہلا مسافر طیارہ نیو یارک کے ورلڈ ٹریڈ سینٹر سے ٹکرایا۔ 23 منٹ بعد، دوسرا جیٹ طیارہ ورلڈ ٹریڈ سینٹر دوئم سے ٹکرایا، جس کے بعد بلند و بالا عمارتوں میں شعلے اور دھواں بھڑک اٹھا اور یہ عمارتیں ملبے کا ڈھیر بن گئیں۔

بعد ازاں پیر کی صبح، ٹرمپ پینٹاگان میں منعقد ہونے والی ایک یادگار تقریب میں شریک ہوں گے، جسے اُسی دِن ہائیجیک ہونے والے چار تجارتی طیاروں میں سے ایک ٹکرایا، جس کے نتیجے میں عمارت کو سخت نقصان پہنچا تھا۔ اس سے قبل پیر ہی کے روز عمارت کے سامنے امریکی پرچم لہرایا گیا۔

نائب صدر مائیک پینس پنسلوانیا کے شہر شینکس ویل جائیں گے، جہاں ہائی جیک ہونے والا دوسرا طیارہ گر کر تباہ ہوا۔

خیال کیا جاتا ہے کہ جب مسافروں نے محسوس کیا کہ چاقو بردار دہشت گردحملے کی غرض سے جہاز کو واشنگٹن لے جانا چاہتے ہیں، جس کا ہدف ایوانِ نمائندگان کی عمارت یا وائٹ ہاؤس ہو سکتا ہے، تو مسافر طیارے کا کنٹرول سنبھالنے کے لیے اٹھ کھڑے ہوئے، جب کہ ہائی جیکروں نے جہاز حوالے کرنے کے بجائے اسے گرا کر تباہ کر دیا۔

گیار ستمبر 2001ء کو ہائی جیک ہونے والے چاروں طیاروں میں سوار تمام لوگ ہلاک ہوئے۔ نیو یارک شہر میں بڑے پیمانے پر ہلاکتوں کے علاوہ پینٹاگان پر حملے کے نتیجے میں بھی کافی جانی نقصان واقع ہوا۔ حملوں کے وجہ سے تقریباً کُل 3000 افراد ہلاک ہوئے۔

قالب وردپرس

Loading...